کراچی اسٹاک مارکیٹ تجزیہ - 2 جون 2013

کراچی اسٹاک مارکیٹ میں پچھلا بہت تیز رہا اور انڈکس 540 پوائنٹس اضافے کے بعد 21823 پر بند ہوا.مارکیٹ میں  ٹوٹل 463 ملین شیئرز کا کاروبار ہوا  یہ اضافہ اس سے پچھلے ہفتے کے مقابلے میں  %5 زیادہ رہا. بیرونی سرمایاکاری کا حجم  89 .11 ملین ڈالر رہا.

تجزیہ کاروں کے مطابق، اس ہفتے میں بھی مارکیٹ میں ملا جلا رجحان رہے گا کیونکے اقتصادی میدان میں کوئی نی پیشرفت نہیں ہی . تا ہم سرمایا دار پاکستان مسلم لیگ (ن ) پر اعتماد کر رہے ہیں اور امید کی جا رہی ہے کہ آیندہ حکومت توانائی کے بحران کو حل کرنے کی طرف توجہ دے گی اور ملک میں کاروباری سرگرمیاں عمل میں آے گی .

مندرج ذیل سرگرمیاں اہمیت کی حامل ہیں :-
  • پاکستان مسلم لیگ (ن ) 5 ارب روپے کے نے بانڈز متراف کرانے کا ارادہ رکھتی ہی ، یہ رقم توانانی بحران کو حل کرنے مے خرچ کی جانے گی .
  • بیرونی سرمایا کار کی توجہ زیادہ تر PSO ،PPL ،POL، OGDC  اور MCB پر رہی، جبکے اندرونی سرمایا کار زیاد تر BOP ، FCCL ، NIB اور داود سیمنٹ میں متحرک نظر آے .
  • فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے ڈیری اور دیگر مصنوعات پر صفر ریٹیڈ کی سہولت واپس لے لی لیکن یہ خبر اسٹاک ایکسچینج میں مثبت رفتار کو نہیں توڑ سکا .
  • اسٹیٹ بینک کی جانب سے ڈسکاؤنٹ ریٹ میں 50 بیسس پوائنٹس کی کمی متوقع ہے ، اس وجہ سے بینکنگ سیکٹر میں گراوٹ دیکھی گئی 
  • سر تاج عزیز نے کہا ہے کہ حکومت GST کی شرح %17 کر سکتی ہے 
  • جہانگیر صددیقی گروپ نے اس بات کی تردید کی ہے کہ JSBL پر کسی قسم کی کوئی تفتیش نہیں ہو رہی.
گزشتہ ہفتے کے سب سے اوپر دس شیئرز میں تھے: BO Punjab، این آئی بی بینک (NIT )، پاک سروسز، ہم نیٹ ورک، TRG پاکستان لمیٹڈ، گلیکسو اسمتھ کلائن پاک، Jah.Sidd. کمپنی، ماری پٹرولیم، انڈس موٹر اور Bankislami پاکستان.  

گزشتہ ہفتے کے سب سے اوپر دس نقصان اٹھانے والے تھے: غنی گلاس، مری Brewery شریک، Javedan کارپوریشن، باٹا (پاکستان) لمیٹڈ، جے ایس گروتھ فنڈ، Shifa انٹرنیشنل ہسپتال، الائیڈ بینک، TPL Trakker لمیٹڈ، تال لمیٹڈ اور داؤد ہرکیولس کارپوریشن.

 سب سے زیادہ حجم رہا : بینک آف پنجاب، TRG، PTC، نب، JSCL، FCCL، رفتار، کے ای ایس سی، LOTCHEM، اور LPCL.

No comments:

Post a Comment